Jump to content
You are a guest user Click to join the site
URDU FUN CLUB

airborne

Members
  • Content Count

    193
  • Donations

    $0.00 
  • Joined

  • Last visited

  • Days Won

    3

airborne last won the day on June 20

airborne had the most liked content!

Community Reputation

239

About airborne

  • Rank
    Junior Member

Profile Information

  • Gender
    Male
  • Location

Recent Profile Visitors

The recent visitors block is disabled and is not being shown to other users.

  1. اول خویش بعد درویش جناب من تھوڑا لکھے کو زیادہ جانیے۔ اور پہلے خود آغاز کیجئے۔ کچھ تھریڈ میں جان ڈالیے۔ پھر لوگوں کی انگلیوں کا گلہ کیجیے
  2. جناب بہت اچھا آئیڈیا سوچا ہے۔مگر وہی ڈھاک کے تین پات۔ اصل بات تو لوگوں کی شرکت ہے مگر ہم لوگ تو دو جملوں کا تبصرہ بھی نہیں کرسکتے۔ واقعات کون شئیر کرے گا اپ نے بھی تھریڈ سٹارٹر ہونے کے باوجود اس تھریڈ میں کوئی شیرنگ نہیں کی۔ حالانکہ یہ اصول ہے کہ جو تھریڈ بناتا ہے وہی آغاز بھی کرتا ہے۔ جو جو سوال آپ نے پوچھیں ہیں ان کا جواب تو عنایت فرمائیں؟
  3. سپر ڈپر سیکس سیریز کھیلی ہے ۔ موقع پر چوکا۔ اور جہاں چوت اور سانپ دکھے تو مار دو۔ کے محاورے پر عمل
  4. انسانی نفسیات و سماجیات کو جتنا اچھا ادراک ڈاکٹر صاحب کو ہے اتنا کم ہی دیکھا ہے۔
  5. یہ سوال بھی ایک ہستی سے کیا گیا تھا۔ کہ اگر سب قسمت کا ہی کھیل ہے تو دعا کیوں کی جاتی ہے۔ تو جواب تھا کہ ہو سکتا ہے کہ قسمت میں یہی لکھا ہو کہ وہ دعا کرے گا تو نعمت عطا کی جائے گی۔
  6. ظفر بھائی آپ میرا نکتہ نظر نہیں سمجھ سکے۔ضرور میری وضاحت میں کجی ہو گی۔ میں مذہبی حوالے سے بات نہیں کر رہا تھا۔ بہرحال قدر و قضاء کی بحث بہت پرانی اور دقیق ہے۔ لہٰذا اس سے احتراز ہی بہتر ہے۔ ۔ ۔جینز آپکی شکل وصورت اور ذہنی صلاحیتوں کے لئے بنیاد فراہم کرتاہے۔ اور ضروری نہیں کہ امیر لوگوں کے بچے ہی خوبصورت ہوں۔ البتہ خوبصورت لوگوں کے بچے ضرور خوبصورت ہوتے ہیں۔
  7. جی اپنا اپنا نظریہ ہے۔ محنت سے صرف روٹی کمائی جاسکتی ہے، دولت نہیں۔ محنت سے ایک آدھ عورت حاصل کی جاسکتی ہے۔ مگر پلے بوائے نہیں بن سکتے اور شہرت تو ملتی ہی نصیب سے ہے۔ بڑے بڑے عمدہ گویے اور فنکار گمنام ہی رہتے ہیں اور بے سرے اور بیکار لوگ شہرت کی بلندیاں چھونے لیتے ہیں۔ اور نصیب یا قسمت کا فیصلہ آپکی پیدائش سے طے ہو جاتاہے کہ آپ کے والدین کے جینز کونسےھے۔اپکی والدہ آپکے حمل کے دوران کیا کیا کھاتی پیتی رہیں ہیں۔اور کیا کرتی رہیں ہیں۔ اپکے والدین کی سماجی معاشی اور معاشرتی حثیت کیا تھی مذہب اور تعلیم کیا تھی ملک کونسا تھا زمانہ کیا تھا ملک کی سیاسی اور سماجی اصول و ضوابط اور انکا نفاذ کیا تھا۔ ایک شخص کی پیدائش ہی اسکی قسمت کا فیصلہ کر دیتی ہے۔ باقی کچھ خوش قسمت ہیں جو اپنی قسمت کے برخلاف بھی کامیاب ہو جاتے ہیں ی
  8. اپڈیٹ کا شکریہ۔ آ پ پر تو پھدیاں عاشق ہیں عورت ،دولت یا شہرت کسی کسی پر بارش کی طرح برستی ہیں۔ اور کچھ پیاسے، مفلس اور گمنام ہی رہتے ہیں ساری کوششوں کے باوجود
  9. اگر چہ، اڈمن نے منع فرمایا ہے کہ بحث نہ کی جائے۔ مگر مجھے کچھ کہانیوں میں ریڈرز کے کچھ کمنٹز پڑھ کر دکھ ہوا کہ ہم لوگ کتنے بے حس اور اجڈ ہو گئے ہیں کہ جو لوگ ہمیں مفت میں تفریح فراہم کرتے ہیں ہم ان کو ہی زبان کے نشتر چبھوتے ہیں
  10. اب تو آپ کسر نفسی سے کام لے رہے ہیں۔اپ کو رائیٹر بیج مل چکا ہے ایک واقعہ ہوتا ہے اور ایک اس کا بیان ہے اور انداز بیان بور واقعہ کو بھی دلچسپ بنا دیتا ہے آپ کے پاس تو واقعات ہی دلچسپ ہیں
  11. بھائی ،تو کیا ابھی نہیں سنا رہے، آپ اپنی کتھا دھیرج اور حوصلے سے سناؤ۔ قصہ کو اگر دلچسپ انداز سے نہ بیان کیا جائے تو سننے اور سنانے کا فایدہ۔
  12. شاہ جی کا فرمان ہے کہ جب کہانی لکھنا شروع کر دو تو پھر لوگوں کو نہ دیکھو بلکہ اپنا کام مکمل کرو۔ نہ منفی کمنٹ پر غور کرو نہ ہی کم کمنٹ پر توجہ دو بلکہ جو شروع کیا ہے اسے تکمیل کرو۔ باقی مسعود انور صاحب نے نہایت سوقیانہ انداز سے تبصرہ فرمایا ہے۔ انہوں نے ایک سال میں صرف 8کمنٹ کیے ہیں۔ اگر آپ رائیٹر کی حوصلہ افزائی نہیں کرسکتے تو کم از کم خاموش تو رہ سکتے ہیں اکثر لوگ جوش میں شروع کر دیتے ہیں۔مگر پھر وہ اس تخلیقی عمل کے لئے وقت نہیں نکال پاتے۔ تو بحثیت ریڈر ہمیں ان کی ہمت بڑھانی چاہیے تاکہ ان کو ڈوپامین کا ڈوذ ملے اور وہ مزید لکھ سکیں۔ مگر چونکہ ہمارے معاشرے میں شکریے کا رواج نہیں ہے اس لئے ہماری آنا مجروح ہوتی ہے جب ہم کسی کے کام کی تعریف کریں۔
  13. بہت خوب لکھ رہے ہیں۔ سیکس بھی عمدہ ہے کہانی میں بھی پیچ و خم ہیں کمی اگر ہے تو سسپنس ڈالنے کی ہے۔ فاطمہ والی کہانی کو آپ لمبا کھینچ سکتے تھے اور اس میں تجسسس کا اضافہ بھی کر سکتے تھے
  14. یہ ایک قدرتی عمل ہے کہ جب عورت جنسی طور پر متحرک ہوتی ہے تو چوت میں نمی پیدا ہوتی ہے تاکہ دخول میں آسانی ہو۔ اسی طرح مرد کے مزی نکلتی ہے وجہ وہی کہ نا صرف دخول میں آ سانی ہو بلکہ پیشاب کی نالی بھی پیشاب سے پاک ہو جائے اور سپرم اخراج کے وقت ذندہ رہیں۔ آپ نے کسی مرد کے کمنٹ پرتو تبصرہ نہیں کیا کہ اس کا سخت تو نہیں ہو گیا تھا مگر خاتون دیکھتے ہی طنزیہ تبصرہ کر ڈالا۔ آپ اپنا بتائیں۔ کہیں شلوار گندی تو نہیں کر لی تھی۔ خاتون کی آ ییڈی دیکھ کر چوٹ کرنا یا طنز کرنا بالکل غیر اخلاقی ،امتیازی اور نا مناسب ہے
×
×
  • Create New...