Jump to content
URDU FUN CLUB
Young Heart

گندی مزاحیہ شاعری - چوتوں پہ مر رہا ہے انسان بھوسڑی کا

Recommended Posts

چمچماتی چاندنی میں
چمچمانا چوت کا
چوت کی چادر بچھی ہے
شامیانہ چوت کا
اور
چوت سے پیدا ہوا ہے
پھر دیوانہ چوت کا

Share this post


Link to post
Share on other sites

تمام ممبرز فورم پر موجود ایڈز پر ضرور کلک کریں تاکہ فورم کو گوگل کی طرف سے کچھ اررننگ حاصل ہو سکے۔ آپ کا ایک کلک روزانہ فورم کے لیئے کافی ہے

لاجواب بولوں گا تو یہ پوسٹ سپیمنگکہلائی گی

اوّل تا آخر رپلائی تک 

آپ کا تھریڈ ہم دوستوں کے لوروں کو جگاتا تھا پھر 

ٹھس کروا دیتا تھا۔

بہترین 

مزید کا انتظار رہے گا

Share this post


Link to post
Share on other sites

محبوب مرے محبوب مرے
تری مستی میں مجھے جینے دے
بڑا دودھ ہے تیرے سینے میں
مجھے دبا دبا کے پینے دے

Share this post


Link to post
Share on other sites

لوڑا میرا بہت توانا ہے
چوت میں تیری نرم دانہ ہے
تیرا چا چا بھی ماں کا لوڑا تھا
تیرا ما ما بھی ماں چدا تا ہے
جو لگاتا ہے میرے سامنے مٹھ۔۔
نہیں کوئی غیر تیرا نانا ہے
آپ چدو ہیں یا آپ کی دوست
کیا مجھے چود کر بتانا ہے
کیوں میں ڈالوں آپ کی چوت میں
کیا مجھے اپنا لنڈ جلانا ہے
ٹٹے ایسے بٹن ہیں لوڑے کے
جن میں مستی کا سب خزانہ ہے
اب تو ہر لڑکا لڑکی چودے گا
آخر اس نے بھی لطف اٹھانا ھے

Share this post


Link to post
Share on other sites

دال مونگی دی    پھدی گونگی دی

چوت نرس دی    دنیا ترس دی

لوڑا سردار دا     بڑکاں مار دا

ممہ جٹی دا     پیار نال پٹی دا

گل پیار دی    بنڈ دیدار دی

سُوٹا چرس دا   کُوسا نرس دا

کلفی کھویے دی    بنڈ لوئے دی

لن قصائی دا    تے نو وی چائی دا

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!

Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.

Sign In Now

×