Jump to content
URDU FUN CLUB
Sign in to follow this  
Play_Boy007

اب بڑھاپے میں بھی نئے دانت اگائے جا سکتے ہی

Recommended Posts

مصنوعی دانت لگوانے کی بجائے، اب بڑھاپے میں بھی نئے دانت اگائے جا سکتے ہیں

Please login or register to see this image.

طبی ماہرین نے دانتوں کی نشوونما اور دانتوں کی پالش کو قائم رکھنے والے ایک جین کا پتہ چلایا ہے جس کوطبی سطح پر ''Citp2'' کا نام دیا گیا ہے ۔ اس جین کی دریافت سے ''ڈینٹل سانئس'' میں انقلاب برپا کر دیا ہے۔

ڈینٹل سرجری ماہرین نے توقع ظاہر کی ہے کہ اب مصنوعی دانت لگانے کی بجائے، بڑھاپے میں بھی نئے دانت اگائے جا سکیں گے۔ اس کے علاوہ دانتوں کو کیڑا لگنے ، سوراخ ہونے، پالش ختم ہونے اور دیگر امراض کا بھی کامیابی سے خاتمہ ہو سکے گا۔ اورگن اسٹیٹ یونیورسٹی امریکہ کے طبی ماہرین نے اس جین کا پتہ چلایا ہے۔

یہ تحقیقی رپورٹ ''پروسیڈنگ آف دی نیشنل اکیڈیمی سانئس امریکہ''میں شائع ہوئی ہے۔ طبی ماہرین نے کہا ہے کہ جین بہت سے کام نہیں کرتے، ہر جین کے ذمے ایک یا دو کام ہوتے ہیں مگر دانتوں سے متعلق جین متعدد فرائض سرانجام دیتا ہے۔

351xswl.jpg

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!

Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.

Sign In Now
Sign in to follow this  

×