Jump to content
URDU FUN CLUB
Sign in to follow this  
lund4phuddies

لنڈ لگ گئے

Recommended Posts

ایک دفعہ ایک شرابی سمندر کنارے ٹہل رہا ہوتا ہے کہ اسکا پاؤں کسی چیز سے ٹکراتا ہے۔ وہ جھک کر دیکھتا ہے تو وہ ایک شیشے کی بوتل ہوتی ہے اور وہ یہ سوچ کر کہ اس میں کسی دوسرے شرابی کی بچی کچھی شراب ہو گی وہ میں پی لیتا ہوں یہ سوچ کر وہ بوتل کھولتا ہے تو اس میں سے ایک دھواں نکلتا ہے جو جن کا روپ دھار لیتا ہے اور ایک زوردار قہہقہ لگانے کے بعد وہ جن کہتا ہے : "کیا حکم ہے میرے آقا!" شرابی سوچتا ہے کہ ایشوریہ کو طلب کرلیتا ہوں۔ سالی بڑی مست مال ہے چوت اور گانڈ مارنے میں مزہ آئیگا!" وہ جن سے کہتا ہے کہ "میرے لیے ایشوریہ رائے کو حاضر کرو!" جن کہتا ہے: "آقا زیادہ چھچھورا پن مت کرو! ایشوریہ کے چکر میں تو میں اس بوتل میں بند کر دیا گیا ہوں۔ کچھ اور مانگ لو!" شرابی کہتا ہے : "اچھا تو پھر تم خود بتاؤ تم میرے لیے کیا کیا کر سکتے ہو؟" جن کہتا ہے "آقا ! فی الحال تو اپُن کے پاس ٹائم نہیں ہے کافی دن سے بوتل میں بند تھا اور میرا لنڈ میری جناتنی کی چوت کے لیے کافی مچل رہا ہے۔ تم ایسا کرو یہ تین انڈے رکھو۔ تم کو جب بھی کوئی خواہش ہو ایک انڈا پھوڑ دینا اور اپنی زبان سے اپنی خواہش بیان کرنا تمہاری خواہش پوری کر دی جائےگی!" یہ کہہ کر جن اس شرابی کو تینوں انڈے تھما کے اپنی جنی کی گانڈ مارنے کے لیے غائب ہو جاتا ہے۔ اب ذرا ، اس شرابی کا حال سنیے۔ یہ تو ویسے ہی نشے میں دھت تھا تینوں انڈے لی کر یہ سنسان سڑک پر چلا جا رہا تھا کہ اسے ٹھوکر لگ گئی اور ایک انڈا ، اس کے ہاتھ سے چھوٹ کر ٹوٹ گیا۔ ایک انڈے اور ایک خواہش کے ضائع ہونے کا اسے ایسا غم تھا کہ اس کے منہ سے بے ساختہ اس کا تکیہ کلام نکلا "لنڈ لگ گئے" یہ کہنا تھا کہ اس کے سارے جسم پر جا بہ جا لنڈ ہی لنڈ لگ گئے۔ یہ دیکھ کر تو وہ بہت پریشان ہوگیا اور اس کا سارا نشہ ہرن ہو گیا۔ اس نے سوچا یہ تو بڑی بےعزتی کی بات ہے اس طرح تو میں کسی کو منہ دکھانے لائق نہیں رہا ۔ بہت سوچا بہت سر کھجایا تب اس کے دماغ میں ایک ترکیب آئی۔ اس نے دوسرا ، انڈا پھوڑا ، اور کہا "لنڈ ہٹ گئے" اس کے سارے جسم سے لنڈ ہٹ جاتے ہیں۔اب جو اس نے دیکھا تو یہ تو پہلے سے بھی بڑی مصیبت ہوگئی تھی۔ اسکی خواہش تو پوری ہوگئی لیکن جہاں اس کے جسم پہ لگے ہوئے جا بہ جا لنڈ ہٹ گئے وہاں اس کا اپنا پرسنل لوڑا بھی غائب ہوچکا تھا ۔ پہلے وہ دنیا والوں کو منہ دکھانے لائق نہیں رہا تھا اور اب دنیا والیوں کو منہ دکھانے لائق نہیں رہا تھا۔ وہ بڑا گھبرایا اور آخر کار آخری انڈا بھی پھوڑ دیا اور آسمان کی طرف نظر اٹھا کر بولا: "ابے میرا ، والا تو واپس دیتا جا!"۔

*** پھدیوں کا عاشق لنڈ فار پھدیز کا ایک خاص تحفہ ***

Edited by lund4phuddies

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!

Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.

Sign In Now
Sign in to follow this  

×