Jump to content
URDU FUN CLUB
Sign in to follow this  
Waniya

!ملالہ یوسف زئی ایک بہادر لڑکی

Recommended Posts

سوات میں امن و تعلیم کے لئے سرگرم معصوم اور ہونہار طالبہ ملالہ یوسف زئی پر قاتلانہ حملہ ایک ایسی گھناؤنی کاروائی ہے جسے انجام دینے والوں کو جانوروں سے بھی بدتر درجے پر سمجھنا چاہئے۔ ایک تیرہ سالہ طالبہ سے خوفزدہ عناصر نے جنہیں ملالہ کی صورت میں اپنی فرسودہ اور جاہلانہ سوچ کی موت نظر آتی تھی، اس آواز کو خاموش کرنے کی بزدلانہ کوشش کی۔ملالہ جو اقراء پر یقین رکھتی اور اس پر عمل پیرا ہے، اس نے سوات میں ان عناصر کا بہادری سے مقابلہ کیا جو مذہب کی آڑ لے کر عورتوں کی تعلیم کے خلاف ہیں۔ لڑکیوں کے اسکولوں کو بموں سے اڑاتے ہیں اور علم حاصل کرنے والی لڑکیوں اور خواتین کو ڈراتے دھمکاتے ہیں حتیٰ کہ قتل کرنے سے بھی باز نہیں آتے۔ وہ ایسی سوچ کے حامل ہیں جس میں ہر پڑھی لکھی عورت انہیں بے شرم و بے حیا نظر آتی ہے۔ ان کے مطابق عورتوں کا تعلیم حاصل کر نا اسلامی تعلیمات کے منافی ہے۔ ظاہر ہے کہ پاکستان کا روشن ضمیر اسلام پسند معاشرہ ایسے عناصر کو مسترد کرتا ہے جو ان کے مذہب کی غلط تشریح دنیا کے آگے پیش کرے چنانچہ اپنی جاہلانہ سوچ کو بندوق کی زور پر منوانے والایہ تشدد پسند گروہ کھلی قتل و غارت گری پر اتر آیا ہے،ان کے ہاتھ معصوم و بے گناہ پاکستانیوں کے خون سے رنگے ہوئے ہیں۔ ملالہ یوسف زئی پاکستان اور خصوصاً سوات کی عورتوں کی تعلیم کے لئے جدوجہد کی ایک روشن مثال ہے، قومی ایوارڈ یافتہ معصوم طالبہ اس وقت زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلا ہے۔ حکومت پاکستان اس کی قیمتی زندگی کو بچانے کے لئے ہر ممکن کوشش کرے، اور ایسے عناصر کی سرکوبی کرنے میں کسی مصلحت کا شکار نہ بنے جن کا اصل چہرہ سارے پاکستان نے دیکھ لیا ہے۔

 

 

Swat innocent and talented student activist for peace and education Malalh Yusufzai murderous attack on the perpetrators of such a heinous action levels should also worse than animals., A thirteen-year-old girl who was afraid of elements in Malalh against the education of women. schools for girls and learn to make bombs to intimidate the girls and women have even threatened to kill do not stop there. they think that every educated woman who holds So imagine my jahlanh offer further establish strength ualayh the gun violence groups have resorted to killing open, his hands dyed with the blood of innocent Pakistanis have been. Malalh Pakistan, especially in Swat Yusufzai A shining example of the struggle for women's education, the national award-winning innocent student is caught in the struggle of life and death. government of Pakistan that does everything possible to save precious lives, and to srkuby elements Do not become a victim of expediency, which all face Pakistan have seen actually.

Edited by suhail502
ok

Share this post


Link to post
Share on other sites

boht achi bat kahi hai ap nay g or meri persnally us k leay boht boht boht dil say dua b hai k wo jaldi jaldi thek ho jay or is mulk k leay boht kuch kre qk kuch krnay ka sochty to sab hain but krnay walay boht kam hoty hain

Share this post


Link to post
Share on other sites

Please login or register to see this quote.

کس بات سے ڈس ایگریڈ




Is saray Topi Daramay se agree nahi kerta me Ap log Tasweer ka sirf ek rukh daikh rahay hain jo hamara ganda Media ap ko dikha raha ha basssssssssssssss

Share this post


Link to post
Share on other sites

Mein apke bi is tamam batoun se kehin agree kerti lekin bhut ci batein disagree bi kerti houn.

ya dairy jo apne post ki hai mein bi phale read kr chuki houn lekin shayad hum fasila krne wale us waqat ke halat aur mamlat ko bhol jate hein wo tu eik 12, 13 saal ki bachi hai.

lekin attack kerne wale tu aqaalmand hein aur zamidaar bhi hein is bachi ke mind mein ya batein dalne ke.

yahan pic ke do rukh nhi hein.. balke bhut sare rukh hein.

Share this post


Link to post
Share on other sites

Please login or register to see this quote.

Bilkul manti houn.! lekin jo howa hai wo bi Islam nahi ya baat mein pore prove se keh sakti houn.

Share this post


Link to post
Share on other sites

اسلام علیکم دوستو
دال میں کچھ کالا تو ہے !
ملالہ کی صحت یابی کے لئے ہم دل سے دعا گو ہیں مگر ایک بات ذہن میں آئی سوچا آپ لوگوں سے شیئر کر لوں ہو سکتا ہے کہ میری سوچ غلط ہو مگر اس واقعے کو لے کر پوری دنیا میں ہلچل مچ جانا ، ایجنسیز کا حرکت میں آ جانا ، سیاستدانوں کے بیانات اور امریکہ کا فوری احتجاج ، کہیں تو کچھ گڑبڑ ضرور ہے !!!
یاد رہے کہ ملالہ کے ساتھ جو بچی زخمی ہوئی ہے اسکا کہیں بھی کوئی ذکر تک نہیں !

کہیں ایسا تو نہیں کہ ملالہ یوسف زئی پر حملے کی اصل وجہ یہ ہو کہ ہماری توجہ گستاخانہ فلم بنانے والے واقعے سے ہٹ جائے ، جیسے کہ پورے ملک میں نظر آ رہا ہے کہ ہر شخص یہی بات کر رہا ہے، اور اب اس واقعے پر ہی احتجاج ہو رہا ہے ، کہیں بھی فلم کے بارے میں بیان یا احتجاج نظر نہیں آ رہا ، جب کہ ابھی اس فلم پر بھی پابندی نہیں لگی اور ذمہ داروں کو بھی سزا نہیں ملی ..

یہ بات بھی مد نظر رہے کہ
ملالہ سے منسلک ڈائری واضح طور پر بی بی سی کے اپنے بندے کی لکھی لگتی ہے، یہ چھٹی کلاس کی پٹھان بچی کی تحریر بالکل نہیں، تحریر میں مصنوعی پن اور بناوٹ واضح ہے. ھر پیرا میں جان بوجھ کر بہانے بہانے سے طالبان کو ہٹ کرنے کی کوشش کی گئ ہے مجھے تو اس پر بھی یقین نہیں کہ داڑھی اور پردے کے متعلق کمنٹس ملالہ کے اپنے ہیں، ایسے الفاظ تو یورپی ماحول میں پلنے والی اسکی عمر کی مسلمان بچی نہیں بول سکتی، وہ تو پھر پٹھان معاشرے میں پلی بڑھی ہے جسکی نشانی ہی یہ دو چیزیں سمجھی جاتی ہے اور خود اس لڑکی کے اپنے خاندان اور برادری میں یہ چیزیں موجود ہیں. اس معصوم بچی کو بڑے طریقے سے اپنے مقاصد کے لیے استعمال کیا گیا ہے اور کیا جارھا ہے.

دال میں کچھ کالا تو ہے

Share this post


Link to post
Share on other sites

Please login or register to see this quote.

اسلام علیکم دوستو
دال میں کچھ کالا تو ہے !
ملالہ کی صحت یابی کے لئے ہم دل سے دعا گو ہیں مگر ایک بات ذہن میں آئی سوچا آپ لوگوں سے شیئر کر لوں ہو سکتا ہے کہ میری سوچ غلط ہو مگر اس واقعے کو لے کر پوری دنیا میں ہلچل مچ جانا ، ایجنسیز کا حرکت میں آ جانا ، سیاستدانوں کے بیانات اور امریکہ کا فوری احتجاج ، کہیں تو کچھ گڑبڑ ضرور ہے !!!
یاد رہے کہ ملالہ کے ساتھ جو بچی زخمی ہوئی ہے اسکا کہیں بھی کوئی ذکر تک نہیں !

کہیں ایسا تو نہیں کہ ملالہ یوسف زئی پر حملے کی اصل وجہ یہ ہو کہ ہماری توجہ گستاخانہ فلم بنانے والے واقعے سے ہٹ جائے ، جیسے کہ پورے ملک میں نظر آ رہا ہے کہ ہر شخص یہی بات کر رہا ہے، اور اب اس واقعے پر ہی احتجاج ہو رہا ہے ، کہیں بھی فلم کے بارے میں بیان یا احتجاج نظر نہیں آ رہا ، جب کہ ابھی اس فلم پر بھی پابندی نہیں لگی اور ذمہ داروں کو بھی سزا نہیں ملی ..

یہ بات بھی مد نظر رہے کہ
ملالہ سے منسلک ڈائری واضح طور پر بی بی سی کے اپنے بندے کی لکھی لگتی ہے، یہ چھٹی کلاس کی پٹھان بچی کی تحریر بالکل نہیں، تحریر میں مصنوعی پن اور بناوٹ واضح ہے. ھر پیرا میں جان بوجھ کر بہانے بہانے سے طالبان کو ہٹ کرنے کی کوشش کی گئ ہے مجھے تو اس پر بھی یقین نہیں کہ داڑھی اور پردے کے متعلق کمنٹس ملالہ کے اپنے ہیں، ایسے الفاظ تو یورپی ماحول میں پلنے والی اسکی عمر کی مسلمان بچی نہیں بول سکتی، وہ تو پھر پٹھان معاشرے میں پلی بڑھی ہے جسکی نشانی ہی یہ دو چیزیں سمجھی جاتی ہے اور خود اس لڑکی کے اپنے خاندان اور برادری میں یہ چیزیں موجود ہیں. اس معصوم بچی کو بڑے طریقے سے اپنے مقاصد کے لیے استعمال کیا گیا ہے اور کیا جارھا ہے.

دال میں کچھ کالا تو ہے



sahi ab apne bi tasweer ka eik aur rukh peesh ker diya
i said yhan tasweer keh do nahi kahi rukh hein jo bi apni soch present kerna chata hai wo kere
so thats way ya zrori nahi sab agree kerin. Edited by suhail502
s

Share this post


Link to post
Share on other sites

Please login or register to see this quote.

Ye ek sex forum ha yahan Mujhay kuch Paak Hawalay Allow nahi hain mager meray lie Us me aisa Hawala Moujood ha jis k baad muhay kisi behas ki zaroorat nahi ho gi.

Behas wahee pe chalti rehti ha jahan hum Dunyavi hawalon or wajoohat ko samnay Rakhtay howay baat karain to phir pata nahi kitne rukh hon gy or itne rukh beyaan kernay k baad bhi her koi doosray se agree nahi karay ga Mager Jahan baat karain gy Meray Rab k Ferman ki to us k baad sari Behsain Fazool hon gi Thats all.

Share this post


Link to post
Share on other sites

Please login or register to see this quote.

 

اسلام علیکم دوستو
دال میں کچھ کالا تو ہے !
ملالہ کی صحت یابی کے لئے ہم دل سے دعا گو ہیں مگر ایک بات ذہن میں آئی سوچا آپ لوگوں سے شیئر کر لوں ہو سکتا ہے کہ میری سوچ غلط ہو مگر اس واقعے کو لے کر پوری دنیا میں ہلچل مچ جانا ، ایجنسیز کا حرکت میں آ جانا ، سیاستدانوں کے بیانات اور امریکہ کا فوری احتجاج ، کہیں تو کچھ گڑبڑ ضرور ہے !!!
یاد رہے کہ ملالہ کے ساتھ جو بچی زخمی ہوئی ہے اسکا کہیں بھی کوئی ذکر تک نہیں !

کہیں ایسا تو نہیں کہ ملالہ یوسف زئی پر حملے کی اصل وجہ یہ ہو کہ ہماری توجہ گستاخانہ فلم بنانے والے واقعے سے ہٹ جائے ، جیسے کہ پورے ملک میں نظر آ رہا ہے کہ ہر شخص یہی بات کر رہا ہے، اور اب اس واقعے پر ہی احتجاج ہو رہا ہے ، کہیں بھی فلم کے بارے میں بیان یا احتجاج نظر نہیں آ رہا ، جب کہ ابھی اس فلم پر بھی پابندی نہیں لگی اور ذمہ داروں کو بھی سزا نہیں ملی ..

یہ بات بھی مد نظر رہے کہ
ملالہ سے منسلک ڈائری واضح طور پر بی بی سی کے اپنے بندے کی لکھی لگتی ہے، یہ چھٹی کلاس کی پٹھان بچی کی تحریر بالکل نہیں، تحریر میں مصنوعی پن اور بناوٹ واضح ہے. ھر پیرا میں جان بوجھ کر بہانے بہانے سے طالبان کو ہٹ کرنے کی کوشش کی گئ ہے مجھے تو اس پر بھی یقین نہیں کہ داڑھی اور پردے کے متعلق کمنٹس ملالہ کے اپنے ہیں، ایسے الفاظ تو یورپی ماحول میں پلنے والی اسکی عمر کی مسلمان بچی نہیں بول سکتی، وہ تو پھر پٹھان معاشرے میں پلی بڑھی ہے جسکی نشانی ہی یہ دو چیزیں سمجھی جاتی ہے اور خود اس لڑکی کے اپنے خاندان اور برادری میں یہ چیزیں موجود ہیں. اس معصوم بچی کو بڑے طریقے سے اپنے مقاصد کے لیے استعمال کیا گیا ہے اور کیا جارھا ہے.

دال میں کچھ کالا تو ہے

 

 




Dear Mujhay sirf or sirf is baat ka Jawab de dain k Gustakhana Film ban ne k baad ek Month k baad hamari Hakoomat ko Ehtejaj Yaad aaya tha mager ek Bachi ko Goli mari gaee ( jabkeh abhi wo Zinda ha ) hamari Hakoomat ;Armi Cheif ; Siyasi Jamaetain Or sab se ziyada Media Cheekh rahay hain kia ye Bachi hamaray lie Us Touheen se bhi Barh k ha jo Us film me ki gaee Jabkeh is waqay k aglay din hi Ek Madersay per Drone Attack howa or us me 68 Bachay Shaheed ho gay Un Bachon ka kia qasoor tha kia us per Hakoomat , Armi,Media , ya kam se kam hum Awaam me se kisi ka dil khoon k Aansoo roya? Malala to abhi Zinda ha wo 68 Bachay to usi waqat Shaheed ho gay.


Ha koi Jawab ap k Paass Meray Khoon k aansoo Roknay k lie.?

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!

Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.

Sign In Now
Sign in to follow this  

×